SALAL YOUSAF

My CANVAS

ہم نے مدت سے اُلٹ رکھا ہے کاسہٰ اپنا

جب یہ عالم ہو تو لکھیے لب و رخسار پہ خاک اڑتی ہے خانۂ دل کے در و دیوار پہ خاک تُو نے مٹّی سے الجھنے کا نتیجہ دیکھا ڈال دی میرے بدن نے تری تلوار پہ خاک ہم نے مدّت سے اُلٹ رکھّا ہے کاسہ اپنا دستِ زردار ترے درہم و دینار پہ خاک […]

دیکھو آہستہ چلو کانچ کے خواب ہیں بکھرے ہوئے تنہائی میں

دیکھو آہستہ چلو اور بھی آہستہ ذرا دیکھنا سوچ سنبھل کر ذرا پاؤں رکھنا زور سے بج نہ اٹھے پیروں کی آواز کہیں کانچ کے خواب ہیں بکھرے ہوئے تنہائی میں خواب ٹوٹے نہ کوئی جاگ نہ جائے دیکھو جاگ جائے گا کوئی خواب تو مر جائے گا

دیکھنے والا تھا منظرجب کہا درویش نے

رات آ بیٹھی ہے پہلو میں ستارو تخلیہ اب ہمیں درکار ہے خلوت سو یارو تخلیہ آنکھ وا ہے اور حسن یار ہے پیش نظر شش جہت کے باقی ماندہ سب نظارو تخلیہ دیکھنے والا تھا منظر جب کہا درویش نے کج کلاہو بادشاہو تاجدارو تخلیہ غم سے اب ہوگی براہ راست میری گفتگو دوستو […]

آپ سب کی محبتیں اور دعائیں ، سائیٹ کو دوستوں کے ساتھ شیئر کریں پلیز، بصد شکریہ Frontier Theme